پیار کی بات


فرمان نواز

وہ خوش نصیب رو کر مجھے حالِ دل تو سُنا دیتا ہے
میر ا دل اقرار کو زباں تک آنے سے روک دیتا ہے
میں ہر خواب میں اُسے حالِ دل سُنا دیتا ہوں
بچھڑنے کا خوف خواب کے تعبیر بدل دیتا ہے
اگر کبھی وہ مجھ سے پوچھے تیرے دل میں کیا ہے
افسوس میری محبت سے ڈرنے والا یہ موقع کب دیتا ہے
پیارکی بات بتانا اتنی مشکل کیوں ہو رہی ہے
بات تو یہ ہے بات کے زخم وقت کب بھرنے دیتا ہے

Advertisements
Categories:

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s