عمران خان کا لفظ لعنت ۔۔۔ اورعلامہ اقبال کا شعر تحریر : فرمان نواز


تحریر : فرمان نواز


پارلیمنٹ میں ہم اپنے نمائندے اس واسطے بھیجتے ہیں کہ وہ ہمارے لئے قانون سازی کریں۔ جب پارلیمنٹ میں عوام کے لئے کوئی سہولت پیدا کرنے کی کوشش نہیں کی جائے گی تو ایسی پارلیمنٹ پر تین حرف بھیجنا کوئی انہونی بات نہیں۔ زرداری وہ شخص ہے جس نے کہا تھاکہ وعدے کوئی حدیث تو نہیں جوتوڑے نہ جا سکیں۔اب حضرت زرداری کہتے ہیں کہ لعنت کا لفظ پارلیمنٹ کیلئے ٹھیک لفظ نہیں۔
اسلامی تاریخ کو پڑھنے والے خوب جانتے ہیں کہ مسجد الضرار کو اس لئے مسمار کیا گیا تھا کہ وہاں منافقین کے ڈھیرے تھے۔ جب خدا کے گھر کو منافقین کے قبضے میں جانے پر مسمار کیا جا سکتا ہے تو پارلیمنٹ کیوں نہیں۔
جمہوریت اپنے ملک کیلئے حکمران چھننے کا عمل ہے۔اگر کل کو دنیا میں حکمران چھننے کا کوئی نیا بہتر طریقہ اپنایا جاتا ہے تو کیا ہم جمہوریت کے ساتھ پھر بھی جڑے رہیں گے۔ علامہ اقبال نے کہا تھا کہ
جس کھیت سے دہقاں کو میسر نہیں روزی
اُس کھیت کے ہر خوشہ گندم کو جلا دو
علامہ اقبال عمران خان سے بھی زیادہ ایکسٹریم حد تک جاتے ہیں اور روزی پیدا نہ کرنے والے کھیت کو آگ لگانے کا کہتے ہیں۔عمران خان نے لعنت کا لفظ کیا استعمال کیا پنجابی میڈیاکے غراتے اینکرز اور سیاستدا ن میدان میں آگئے ہیں ۔یہ وہی میڈیا ہے جس نے شوبار شریف کو تنقید کا نشانہ نہیں بنایا تھا جب اُس نے زرداری کو مداری کہا تھا اور پاکستان کے صدر زرداری کو چوک پر لٹکانے کی بات کی تھی۔
جمہوریت کو کفر کہنے والے اور 70 ہزار پاکستانیوں کو مارنے والوں سے اگر مذاکرات بری بات نہیں تو پارلیمنٹ پر لعنت بھیجنا کیسے برا ہوا.
میرا ذاتی مشورہ ہے کہ پختونوں کو پنجابی میڈیا کی چالوں میں نہیں آنا چاہئے۔ووٹ جس کو بھی دیں لیکن میڈیا سے متاثر ہو کر نہیں بلکہ یہ سوچیں کہ وہ شخص اپنے علاقے سے کتنا مخلص ہے۔

Advertisements
Categories:

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s